Contact Us

وزیراعظم شہباز شریف کی کابینہ نے حلف اٹھالیا

Prime Minister Shahbaz Sharif's cabinet took oath

اسلا م آباد: وزیراعظم شہباز شریف کی کابینہ نے حلف اٹھالیا۔

صدرمملکت ڈاکٹر عارف علوی کی جانب سے نئی کابینہ سے حلف لینے سے معذرت کے بعد چیئرمین سینیٹ اورقائم مقام صدر صادق سنجرانی نےنئی کابینہ سے حلف لیا۔ وفاقی کابینہ میں 30 وزرا ، 4 وزرائے مملکت اور3 مشیر شامل ہیں
وفاقی کابینہ میں (ن) لیگ کے 14 اور پیپلزپارٹی کے 9 ارکان شامل  ہیں جب کہ بلوچستان عوامی پارٹی اور جمہوری وطن پارٹی سے ایک ایک، جے یو آئی کے 4 اور ایم کیو ایم کے 2  ارکان کابینہ کا حصہ ہیں۔
(ن) لیگ کے خواجہ آصف، احسن اقبال، رانا ثنا اللہ، ایاز صادق، خرم دستگیر، راناتنویر،مریم اورنگزیب، سعدرفیق،  ریاض حسین پیرزادہ، اعظم نذیر تارڑ اور  جاوید لطیف کابینہ کا حصہ ہیں۔
پیپلز پارٹی کے خورشید شاہ، نوید قمر، شیری رحمان، مرتضیٰ محمود، احسان الرحمان مزاری، عابد حسین بھایو اور  شازیہ مری کابینہ میں شامل ہیں جب کہ ایم کیو ایم کے امین الحق  اور  فیصل سبزواری کابینہ کا حصہ ہیں۔
جے یو آئی (ف) کے اسعد محمود ، مولانا عبدالواسع، مفتی عبدالشکور،  طلحہٰ محمود، بی اے پی کے اسرار ترین، نوابزادہ شاہ زین بگٹی، طارق بشیر چیمہ وفاقی کابینہ میں شامل ہیں جب کہ عائشہ غوث پاشا، حنا ربانی کھر اور  عبدالرحمان کانجو وزیر مملکت ہیں۔
اس کے علاوہ قمر زمان کائرہ، انجینئر امیر مقام اور عون چوہدری کو بطور مشیر کابینہ میں شامل  کیا گیا ہے۔
بلاول بھٹو برطانیہ جارہے ہیں واپسی پر وہ بطور وزیرخارجہ حلف اٹھائیں گے۔

پیپلزپارٹی کے رہنما مصطفی نواز کھوکھر نے وزیر مملکت کا حلف لینے سے انکار کردیا۔ پیپلز پارٹی کے شریک چیئرمین آصف علی زرداری نے رابطہ کیا مگر مصطفی نواز کھوکھر نے واضح جواب دیدیا۔

انہوں نے کہا کہ وزیر مملکت کا عہدہ لے کر اپنی تنزلی نہیں کرواسکتا، میں ماضی میں وفاقی وزیر کے برابر عہدے کے ساتھ انسانی حقوق کا مشیر رہ چکا ہوں۔ مصطفی نواز کھوکھر نے تنزلی پر اپنی پارٹی قیادت سے ناراضی کا اظہار کیا اور حلف لینے نہ آئے۔

مزید پڑھیں