Contact Us

روسی تیل کی آمد: پیٹرولیم مصنوعات کی قیمتوں میں تیس سے چالیس روپے فی لیٹر تک کمی کا امکان

Petroleum prices hiked by up to Rs8.14 per litre

اسلام آباد: روس سے آنے والا تیل کی جہاز سے آف لوڈنگ کا عمل جاری اور اب تک 6000 بیرل تیل جہاز سے اتار لیا گیا ہے۔

وزارت پیٹرولیم کے ذرائع سے سامنے آنے والی اطلاع کے مطابق روس سے خریدے گئے تیل کی ادائیگی معاہدے کے تحت ڈالر کے بجائے چینی کرنسی میں کی گئی ہے۔

وزارت کے ذرائع کا کہنا ہے کہ روسی تیل سے پاکستان میں پیٹرولیم مصنوعات کی قیمتیں کم ہوں گی اور ان میں تیس سے چالیس روپے فی لیٹر تک کمی کا امکان ہے۔

ذرائع کے مطابق 45 ہزار ٹن تیل کی پہلی کھیپ PRL ریفائنری میں ریفائن ہو گی، جس میں پارکو بھی اپنا حصہ ڈالے گی، آئندہ دو ہفتوں میں روسی تیل مارکیٹ میں آ جائے گا۔

پاکستان اور روس کے درمیان ابتدائی طور پر ایک لاکھ بیرل تیل کا معاہدہ طے ہوا ہے، پہلی کھیپ کے نتائج کے بعد سات لاکھ بیرل تیل پاکستان آئے گا۔

روسی تیل سے قیمتوں سے ریلیف کے اثرات یکم جولائی تک آنے کا امکان ہے۔

مزید پڑھیں